کلیہ ابو بکر صدیق رضی اللہ عنہ کا سالانہ تقریری مسابقہ اختتام پذیر

کلیہ ابو بکر صدیق رضی اللہ عنہ کا سالانہ تقریری مسابقہ اختتام پذیر
________________________

أشرف شاكر ریاضی
(استاذ کلیہ ھذا)

مرکز السلام التعلیمی شریکنڈ کے زیر اشراف چلنے والا فعال دینی ادارہ کلیہ ابو بکر صدیق رضی اللہ عنہ گمانی صاحب گنج جھارکھنڈ میں سال رواں کا سالانہ تقریری مسابقہ مورخہ ٢١ /جنوری ٢٠٢٤ بروز اتوار سے مورخہ ٢٤/ جنوری بروز بدھ تک مسلسل جاری رہکر اپنے اختتام تک پہنچ چکا ہے الحمد للہ !

محترم قارئین کرام! یوں تو خطابت کی اہمیت و ضرورت ہر دور میں مسلم رہی ہے، لیکن آج کے اس پر فتن دور میں خطابت کی معنویت میں مزید اضافہ ہوا ہے، خطابت اللہ تعالیٰ کی عطاکردہ،خاص استعداد وصلاحیت کا نام ہے جس کےذریعے ایک مبلغ اپنے مافی الضمیر کے اظہار ،اپنے جذبات واحساسات دوسروں تک منتقل کرنے اور عوام الناس کو اپنے افکار ونظریات کا قائل بنانے کے لیے استعمال کرتا ہے ۔ایک قادر الکلام خطیب اور شاندار مقرر مختصر وقت میں ہزاروں،لاکھوں افراد تک اپنا پیغام پہنچا سکتا ہے اوراپنے عقائد ونظریات ان تک منتقل کرسکتا ہے۔خطابت صرف فن ہی نہیں ہے بلکہ اسلام میں خطابت اعلیٰ درجہ کی عبادت اورعظیم الشان سعادت ہے-

محترم قارئین کرام!

گزشتہ کئے سالوں کے مقابلے امسال مشارکین طلبہ کی کثرت کو مد نظر رکھتے دو دنوں کی جگہ چار دن پروگرام جاری رہا، اور پھر پروگرام اپنے تمام تر رعنائیوں وتزک و احتشام کے ساتھ اپنے اختتام تک پہنچا الحمد للہ !

محترم قارئین کرام!!
اس سالانہ تقریری مسابقہ کو تاریخی و یادگار بنانے کے لئے کلیہ کے ذمہ داران و اساتذہ کرام کے طرف سے وقت اور حالات کو پیش نظر رکھتے ہوئے یہ سالانہ تقریری مسابقہ کئے الگ الگ زبانوں میں کرایا گیا،
مثلاً عربی، اردو، انگریزی، ہندی، وبنگلہ ، اور ہر زبان سے متعدد و متنوع عناوین کا انتخاب کیا گیا !

پروگرام کے آخری دن طلبہ کی حوصلہ افزائی کے لئے “مرکز السلام التعلیمی” کے کئے ذمہ داران بطور مہمان خصوصی حاضر رہے، جن میں شیخ برہان الدین سلفی پرنسپل کلیہ عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا گمانی صاحب گنج جھارکھنڈ ،جناب معین الحق صاحب ، مولانا حیدر صدیقی، مولانا پرویز صدیقی صاحب، مولانا ابو طالب صدیقی صاحب وغیرھم قابل ذکر ہیں –
اختتامِ بزم کے پرمسرت گھڑی میں جہاں ایک طرف طلبہ کے چہروں پہ شادمانی تھی وہیں دوسری طرف انہیں اپنے نتائج کا بے صبری سے انتظار بھی تھا-
لیکن قبل اسکے کہ نتائج کا اعلان ہوتا مہمانانِ عظام کے طرف سے تاثراتی کلمات کا سلسلہ شروع ہوا-
بعدہ عمید الکلیہ شیخ خیرالاسلام مدنی حفظہ اللہ نے تمام مشارکین طلبہ کی حوصلہ افزائی کرتے ہوئے نہایت ہی جامع و پرمغز خطاب پیش کیا، اور زندگی میں مسلسل جدوجہد کے ساتھ بلند عزائم، اونچی اڑان، اعلیٰ افکار ونظریات کے طرف ابھارا-
پھر اعلانِ نتائج وفائزین طلبہ کے مابین تقسیمِ انعامات کا دور شروع ہوا، اور استاذہ کرام و دیگر حاضرین کے شکریے کے ساتھ پروگرام کے اختتام اعلان ہوا –

اپنے مضامین اور خبر بھیجیں


 udannewsdesk@gmail.com
 7462884092

ہمیں فیس بک پیج پر بھی فالو کریں


  https://www.facebook.com/udannewsurdu/

loading...
udannewsdesk@gmail.comآپ بھی اپنے مضامین ہمیں اس میل آئی ڈی پر بھیج سکتے ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *