نونہالان کی تعمیر میں استاذ کا کردار

 

نونہالان کی تعمیرمیں استاذ کا کردار

از: محمدطاسین ندوی

انسان جب کسی بھی عمل و فن اورتعلیم کاآغاز کرتاہےتوایسے ماہر، باذوق،باکمال شخصیت کی تلاش کرتا ہے جس سے نونہالان بھر پور استفادہ کرے اور ہر طرح کا گُر اس سے اخذ کرے نیز ایسی شخصیت جس کاانتخاب بچوں کی تعلیم و تربیت، یا فنکاری کے لئے کیا جاتا ہے وہ استاد کہلاتے ہیں.

استاذ اگر مخلص،نیک دل،محنتی ہوتے ہیں تو اس سے زانوئے تلمذ تہ کرنے والے بھی خوش گفتار،خوش کردار، باغیرت،خوددار،محنتی، ماہر اور اچھے اخلاق کے حامل ہوتے ہیں کیونکہ اس نیک اور بااخلاق کی مثال اس عطر فروش کی ہے کہ اگر کوئی اس کے پاس جائیگا کچھ نہیں خریدے گا پھر بھی خوشبو ہی لیکر واپس آئیگا.

اگر استاذ ان صفات مذکورہ سے متصف نہیں تو پھر وہ استاذ تو ہوگا لیکن اپنے شاگردان کو اسی سے لیس کرے گا جو وہ دانستہ یا نادانستہ انجام دے رہا ہوگاکیونکہ اکثر چھوٹے اپنے بڑوں کی نقل کرتے ہیں

وقاص اعوان رقمطراز ہیں کہ کسی بھی انسان کی کامیابی کے پیچھے اچھے استاد کی بہترین تربیت کار فرما ہوتی ہے.خوش قسمت ہوتے ہیں وہ لوگ جن کی زندگی میں اچھے استاد میسر آ جاتے ہیں۔ ایک معمولی سی نوخیز بچے سے لے کر ایک کامیاب فرد تک سارا سفر اساتذہ کا مرہون منت ہے۔ وہ ایک طالب علم میں جس طرح کا رنگ بھرنا چاہیں بھر سکتے ہیں

قارئیں کرام! استاد قوموں کی تعمیر میں بڑا اہم کردار ادا کرتے ہیں۔ اچھے لوگوں کی وجہ سے اچھا معاشرہ تشکیل پاتا ہے اور اچھے معاشرے سے ایک بہترین قوم تیار کی جا سکتی ہے۔ اساتذہ اپنےکو آج قربان کر کے بچوں کے کل کی بہتری کے لیے کوشاں رہتے ہیں۔ دیگر معاشروں اور مذاہب کے مقابلے میں اگر اسلام میں استاد کے مقام کے بارے میں ذکر کیا جائے تو اسلام اساتذہ کی تکریم کا اس قدر قائل ہے کہ وہ انہیں روحانی باپ کا درجہ دیتا ہے

کسی بھی انسان کے والدین اس

پیدا کرنے کا ذریعہ و توسط توہیں لیکن استاد اس کی روحانی اور اخلاقی تربیت کے نتیجے میں اسے زمین کی پستیوں سے اٹھا کر آسمان کی بلندیوں تک پہنچا دیتا ہے۔ طالب علم کو آسمانوں کی بلندیوں تک پہنچانے میں اور اس کی شخصیت کو نکھار نے میں اساتذہ بہت نمایاں کردار ادا کرتے ہیں۔ اسی لیے اللہ کے نبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے بے شمار جگہوں پر اساتذہ کے احترام کا حکم دیا۔

دعاگو ہوں کہ اللہ تعالی ہمیں بھی ایک عمدہ و مخلص اور مثالی استاذ بنائے آمین یارب العالمین

اپنے مضامین اور خبر بھیجیں


 udannewsdesk@gmail.com
 7462884092

ہمیں فیس بک پیج پر بھی فالو کریں


  https://www.facebook.com/udannewsurdu/

loading...
udannewsdesk@gmail.comآپ بھی اپنے مضامین ہمیں اس میل آئی ڈی پر بھیج سکتے ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *