تمہاری جفا اب بہت بڑھ چکی ہے

غزل

 

تمہاری جفا اب بہت بڑھ چکی ہے

نگہ اب ہماری طرف گَڑ چکی ہے

 

بہت سن چکے سر زنش ہم تمہاری

یہی لگ رہا ہے خرد سڑ چکی ہے

 

لگایا بہت تم سے دل میں نے ہمدم

مگر اب شرارت تمہیں چڑھ چکی ہے

 

تبسم بھرے خوبصورت سے چہرے

بتا یہ رہے ہیں نظر لڑ چکی ہے

 

چراغ محبت جلانے سے پہلے

ستم ڈھا رہے ہو جلن پڑ چکی ہے

 

کثافت کدورت تیاگو یہ عالم

اسی میں رہو اب خوشی اَڑ چکی ہے

 

عالم فیضی

اپنے مضامین اور خبر بھیجیں


 udannewsdesk@gmail.com
 7462884092

ہمیں فیس بک پیج پر بھی فالو کریں


  https://www.facebook.com/udannewsurdu/

loading...
udannewsdesk@gmail.comآپ بھی اپنے مضامین ہمیں اس میل آئی ڈی پر بھیج سکتے ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *