غزل

*_____غزل_____*

*عالم فیضی*

 

آج کل یہ کیا حماقت ہوگئی

بس ہٹے نظروں سے غیبت ہوگئی

 

کنج تنہائی میں بے خود دیکھ کر

مجھ پہ اس کی اب عنایت ہوگئی

 

دکھ رہے ہیں سب یہاں سہمے ہوئے

ان دنوں کس کی حکومت ہوگئی!

 

غیر کی دولت پہ نخوت دیکھ لو

اس کی اب کیا کیا نزاکت ہوگئی؟؟

 

مل گئی تھوڑی سی شہرت اور پھر

اس کے جی میں اب شرارت ہوگئی

 

کس قدر لہجے نے ڈھایا ہے ستم

خیر خواہوں سے عداوت ہوگئی

 

تم کو عالم مل گیا اچھا ہنر

زہر کیا اگلا کہ شہرت ہوگئی

 

اپنے مضامین اور خبر بھیجیں


 udannewsdesk@gmail.com
 7462884092

ہمیں فیس بک پیج پر بھی فالو کریں


  https://www.facebook.com/udannewsurdu/

loading...
udannewsdesk@gmail.comآپ بھی اپنے مضامین ہمیں اس میل آئی ڈی پر بھیج سکتے ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *