آٹھویں کلاس کی طالبہ نے گھر کی پانچویں منزل سے کود کر خود کشی کر لی

لکھنؤ: لکھنؤ کے حسین گنج علاقے میں جمعرات کے روز ایک آٹھویں کلاس کی لڑکی نے اپنے گھر کی پانچویں منزل سے کود کر خودکشی کرلی۔ ابھی تک خودکشی کی وجہ  معلوم نہیں ہوسکی ہے لیکن بچی نے سوسائڈ نوٹ میں اپنی والدہ سے معافی مانگتے ہوئے لکھا ہے کہ وہ پیچھے رہ گئی ہے۔ “ماما ، میں نے اپنے کیے پر افسوس ہے۔ مجھے واقعی افسوس ہے ، مجھے اپنے آپ سے شرم آتی ہے۔” لڑکی نے لکھا ۔

جاں بحق ہونے والی طالبہ کی والدہ ایک پرایویٹ بینک میں منیجر ہیں جبکہ اس کے والد سابق آرمی شخص ہیں۔

ابتدائی معلومات کے مطابق ، مبینہ طور پر اس کی والدہ نے اپنی پڑھائی پر توجہ نہ دینے پر لڑکی کو ڈانٹا تھا جس کے بعد لڑکی نے یہ انتہائی اقدام اٹھایا۔ تاہم ، اس کے کنبہ کے کچھ افراد نے اس کی خود کشی کی وجہ اسکول کے دباو کو بتایا ہے۔

اسکول نے ان الزامات کی تردید کی ہے۔ اسکول ذرائع نے بتایا ہے کہ متوفی لڑکی ایک اوسط طالبہ تھی اور اس کے تعلیم کے حوالے سے کوئی مسئلہ نہیں تھا اور نہ ہی اس کی پڑھائی سے متعلق کوئی شکایت تھی۔ اب تک کوئی ٹھوس وجہ سامنے نہیں آئی ہے اور نہ ہی لڑکی کے والدین نے اسکول کے ےخلاف کسی قسم کی شکایت درج کرائی ہے ۔

اپنے مضامین اور خبر بھیجیں


 udannewsdesk@gmail.com
 7462884092

ہمیں فیس بک پیج پر بھی فالو کریں


  https://www.facebook.com/udannewsurdu/

loading...
udannewsdesk@gmail.comآپ بھی اپنے مضامین ہمیں اس میل آئی ڈی پر بھیج سکتے ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *